آئینہ کے رکن بنیں ؞؞؞؞؞؞؞ اپنی تخلیقات ہمیں ارسال کریں ؞؞؞؞؞s؞؞s؞؞ ٓآئینہ میں اشتہارات دینے کے لئے رابطہ کریں ؞؞؞؞؞؞؞؞؞ اس بلاگ میں شامل مشمولات کے حوالہ سے شائع کی جاسکتی ہیں۔

Sunday, 26 August 2018

Ek Pahaad aur gilehri - NCERT Solutions Class VI Urdu

ایک پہاڑ اور گلہری
علامہ اقبال

کوئی پہاڑ یہ کہتا تھا اک گلہری سے 
تجھے ہو شرم تو پانی میں جا کے ڈوب مرے 

ذرا سی چیز ہے اس پر غرور! کیا کہنا! 
یہ عقل اور یہ سمجھ یہ شعور! کیا کہنا! 

خدا کی شان ہے نا چیز چیز بن بیٹھیں! 
جو بے شعور ہوں یوں با تمیز بن بیٹھیں! 

تری بساط ہے کیا میری شان کے آگے 
زمیں ہے پست مری آن بان کے آگے 

جو بات مجھ میں ہے تجھ کو وہ ہے نصیب کہاں 
بھلا پہاڑ کہاں جانور غریب کہاں! 

کہا یہ سن کے گلہری نے منہ سنبھال ذرا 
یہ کچی باتیں ہیں دل سے انہیں نکال ذرا! 

جو میں بڑی نہیں تیری طرح تو کیا پروا! 
نہیں ہے تو بھی تو آخر مری طرح چھوٹا 

ہر ایک چیز سے پیدا خدا کی قدرت ہے 
کوئی بڑا کوئی چھوٹا یہ اس کی حکمت ہے 

بڑا جہان میں تجھ کو بنا دیا اس نے 
مجھے درخت پہ چڑھنا سکھا دیا اس نے 

قدم اٹھانے کی طاقت نہیں ذرا تجھ میں 
نری بڑائی ہے! خوبی ہے اور کیا تجھ میں 

جو تو بڑا ہے تو مجھ سا ہنر دکھا مجھ کو 
یہ چھالیا ہی ذرا توڑ کر دکھا مجھ کو 

نہیں ہے چیز نکمی کوئی زمانے میں 
کوئی برا نہیں قدرت کے کارخانے میں 

خالی جگہ کو بریکٹ میں دیے ہوئے صحیح لفظ سے بھریے
1. تجھے ہو شرم،تو پانی میں جاکے ڈوب مرے(دریا،پانی)
2. خدا کی شان ہے نا چیز چیز بَن بیٹھیں(بَن،کر)
3. تِری بساط ہے کیا میری شان کے آگے؟(آن، شان)
4. بھلا پہاڑ کہاں،جانور غریب کہاں؟(غریب،امیر)
5. نہیں ہے تو بھی تو آخر مری طرح چھوٹا(موٹا،چھوٹا)
6. ہر ایک چیز سے پیدا خدا کی قدرت ہے(عظمت،قدرت)
7. کوئی برا نہیں قدرت کے کارخانے میں(برا،بڑا)

سوچیے اور بتائیے

سوال: پہاڑ نے گلہری سے کیا کہا؟
جواب: پہاڑ نے گلہری کو ذرا سی چیز کہا اور پہاڑ نے گلہری سے کہا کے شرم ہو تو جاکر پانی میں ڈوب کر مرجا۔

سوال: پہاڑ نے اپنی بڑائی کن باتوں سے ظاہر کی؟
جواب: پہاڑ نے اپتی بڑائی کرتے ہوئے گلہری کو نیچا دکھایا اور کہا کہ زمین بھی پست ہے پہاڑ کے آن بان کے آگے۔

سوال: گلہری نے پہاڑ کی باتیں سن کر کیا کہا؟
جواب: گلہری نے پہاڑ کی باتیں سن کر پہاڑ کو منھ سبھالنےکہا اور کہا کہ ان کچّی باتوں کو دل سے نکالنے کہا اور اسنے کہا کہ جو میں بڑی نہیں تیری طرح تو کیا ہوا خدا نے کوئی بڑا کوئی چھوٹا اور سب کو الگ کام کے لئے بنایا ہے۔

سوال: گلہری میں کیا خوبی ہے جو پہاڑ میں نہیں ہے؟
جواب: گلہری درخت پہ چڑھ سکتی ہے چھالیا توڑ سکتی ہے لیکن پہاڑ یہ سب نہیں کر سکتا۔

سوال: خدا کی حکمت کن باتوں سے ظاہر ہوتی ہے؟
جواب: دنیا کی ہر چیز سے خدا کی حکمت ظاہر ہوتی ہے کوئی بھی چیز بیکار نہیں  دنیا میں خدا کی بنائی ہوئی کوئی بھی چیز بری نہیں ہے۔

دیگر اسباق کے لیے کلک کریں

0 comments:

Post a comment

خوش خبری