آئینہ کے رکن بنیں ؞؞؞؞؞؞؞ اپنی تخلیقات ہمیں ارسال کریں ؞؞؞؞؞s؞؞s؞؞ ٓآئینہ میں اشتہارات دینے کے لئے رابطہ کریں ؞؞؞؞؞؞؞؞؞ اس بلاگ میں شامل مشمولات کے حوالہ سے شائع کی جاسکتی ہیں۔

Friday, 31 January 2014

مسلم علاقوں میں گندگی،ذمہ دار کون؟(قسط۱)

دوسروں کے رہائشی علاقوں کو آپ حسرت کی نگاہ سے دیکھتے ہیں کہ کاش آپ جہاں رہتے ہیں وہ علاقہ بھی اتنا ہی صاف ستھرا اور خوبصورت ہوتا۔اور اس کے لئے آپ سرکاری عملے کو کوستے بھی ہیں۔لیکن کیا آپ نے کبھی سوچا ہے کہ آپ کے علاقے کی بدحالی کے لئے جتنا انتظامیہ ذمہ دار ہے اتنے ہی ذمہ دار آپ بھی ہیں۔۔کیا آپ نے کبھی اس بات پر غور کیا ہے کہ آپ اپنے علاقے کو صاف ستھرا اور گندگی سے پاک رکھنے میں کتنا مددگار ہیں۔۔ زیادہ دور نہیں جائیں آپ خود اپنے کردار و عمل پر نظر ڈالیں۔صبح سویرے صفائی کرنے والا چھاڑو لگاکر جاتا ہے اور آپ اپنی چھت سے کوڑے کی تھیلی سڑک پر پھینک دیتے ہیں۔چاہے وہ کسی کے سر پہ ہی کیوں نہ جا گرے۔کیا یہ آپ کی ذمہ داری نہیں ہے کہ آپ اپنے کوڑے سڑک پر نہ پھینک کر اسے اپنے گھر میں رکھیں اور جب صفائی والا یا والی آے تو یہ اس کے حوالے کریں تاکہ آپ کے آس پاس کی جگہ صاف ستھری رہے۔
لیکن یہ صرف ایک پہلو ہے۔اس مچاملہ کا دوسرا پہلو یہ ہے کہ انتظامیہ اپنی ذمہ داریوں سے نہیں بچ سکتا۔آپ کسی بھی مسلم علاقے میں جائیں گندگی سے آپ کا سانس لینا دوبھر ہوگا۔جابجا کوڑے کے ڈھیر اوران کی بدبو آپ کو ناک پر رومال رکھنے کے لئے مجبور کردے گی۔

0 comments:

Post a comment

خوش خبری