آئینہ کے رکن بنیں ؞؞؞؞؞؞؞ اپنی تخلیقات ہمیں ارسال کریں ؞؞؞؞؞s؞؞s؞؞ ٓآئینہ میں اشتہارات دینے کے لئے رابطہ کریں ؞؞؞؞؞؞؞؞؞ اس بلاگ میں شامل مشمولات کے حوالہ سے شائع کی جاسکتی ہیں۔

Sunday, 27 September 2020

Chidiya Ghar Ki Sair NCERT Class 9 Jaan Pehchaan

چڑیا گھر کی سیر

آج اسکول کی چھٹی تھی۔ حامد کے ابا کی بھی چھٹی تھی۔ وہ حامد اور اس کی بہن کو چڑیا گھر دکھانے لے گئے ۔ ٹکٹ لے کر چڑیا گھر میں داخل ہوے تو حامد نے پوچھا :" ابا جان ! چڑ یا گھر میں ا تنے جانورکہاں سے آتے ہیں؟
" یہ طرح طرح جانور دیس بد یس سے لائے جاتے ہیں" حامد کے ابا نے بتایا ۔" ان میں کچھ ٹھنڈے ملک کے  جانور ہیں اور کچھ گرم ملکوں کے ۔
یہ کیا ہے ابا جان!‘‘ حامد کی بہن نے ایک جانور کی طرف اشارہ کرتے ہوئے پوچھا۔ " یہ پانڈا ہے" انھوں نے بتایا یہ ہمارے ملک کا جانور نہیں ہے۔ ٹھنڈے ملک کا رہنے والا ہے۔ دیکھو اس کے جسم پر کتنے گھنے بال میں جو اسے سردی سے بچاتے ہیں۔ گرمیوں میں اسے بہت گرمی لگتی ہے، اس لیے چڑیا گھر میں اس کے پنجرے کو گرمی کے موسم میں ٹھنڈا رکھا جاتا ہے۔ پانڈا پھل ، بانس کی ہری پتیاں ، نرم گھاس اور سبزیاں شوق سے کھاتا ہے کٹہرے میں بنا ہوا پنجرہ اس کے رہنے کا گھر ہے۔“
اور آگے چلے تو بلی کی طرح بیٹھا ہوا ایک بڑا جانور نظر آیا۔ حامد نے پوچھا: ابا اس کا کیا نام ہے؟
یہ کنگارو ہے ۔ کنگارو بھی غیر ملکی جانور ہے۔ اس کے گھر کو ٹھنڈا رکھنے کی ضرورت نہیں ہوتی ۔ کنگارو بڑا ہوتا ہے، اس لیے اس کو لمبے چوڑے اور کھلے کٹہرے میں رکھا گیا ہے۔ اس کی دم لمی ہوتی ہے۔ تم کنگارو کے پیٹ پر بنی تھیلی سی دیکھ رہے ہونا ! یہ تھیلی بچے کو رکھنے کے لیے ہوتی ہے۔ اس میں بچے کو بٹھا کر یہ خوب تیز بھاگ سکتا ہے ۔ کنگارو پھل، پتیاں ، سبزیاں اور نرم نرم گھاس کھاتا ہے۔ اس کو گیہوں بہت پسند ہے۔
”اچھا چلو، آگے چلیں آگے بڑھے تو سفید شیر دکھائی دیا۔ حامد کے ابا نے بتایا:” یہ سفید شیر ہے ۔ یہ ریوا کے جنگل میں پایا جاتا ہے جو کہ مدھیہ پردیش میں ہے ۔ دیکھو اس کے رہنے کے لیے کتنی لمبی چوڑی اور اونچی باڑھ باندھی گئی ہے۔ اس میں لمبی لمبی گھاس اور پیٹر ہیں ۔ وہ دیکھو تالاب بھی ہے۔ گرمی لگنے پر یہ تالاب میں جا بیٹھتا ہے۔ ایک بڑا سا پنجرہ بھی اس کے لیے بنا ہوا ہے۔ شیر گوشت خور جانور ہے۔ پیٹ بھرنے کے بعد شیر کسی پیڑ کے نیچے آرام سے سو جاتا ہے۔
ابا جان! ذرا ادھر دیکھیے : وہ بندر کی شکل کا کون سا جانور ہے؟‘‘ حامد کی بہن نے پوچھا۔
یہ چمپینزی ہے۔ چمپینزی ایک طرح کا بندر ہوتا ہے۔ یہ ہمارے ملک میں نہیں پایا جاتا ۔ یہ ٹھنڈے ملک سے لایا گیا ہے۔ اسے گرمی بہت ستاتی ہے۔ اسی لیے اس کے پنجرے کو ٹھنڈا رکھا جاتا ہے۔ چمپینزی پھل اور سبزیاں کھاتا ہے۔ گوشت نہیں کھا تھا۔ اسے دودھ اور روٹی بھی دی جاتی ہے۔ چمپینزی کو دن میں کئی بار کھانا دیا جاتا ہے۔
آگے چلے تو دیکھا کہ ایک بندر کٹہرے میں اچھل کود کر رہا ہے ۔ تھوڑی دور پر نقل اتارتے ہوئے بندر ، چھلانگیں مارتے ہوئے ہرن اور چنگھاڑتے ہوئے ہاتھی بھی دکھائی دیے۔ آگے بڑھے تو بارہ سنگھا، چیتل، ریچھ اور زراف بھی نظر آئے ۔ طرح طرح کی رنگ برنگی چڑیاں اور طوطے دیکھ کر حامد اور اس کی بہن بہت خوش ہوئے۔ چڑیا گھر سے واپس ہوتے ہوئے حامد نے اپنے ابا سے پوچھا اگر یہ جانور بیمار ہو جائیں تو کیا کرتے ہیں؟
انھوں نے کہا: ان کے پنجروں اور کٹہروں کو روزانہ صاف کیا جاتا ہے اور سردی گرمی سے بچانے کا انتظام بھی کیا جاتا ہے۔ کھانے میں مناسب غذائیں دی جاتی ہیں اور کبھی کبھی ایسی دوائیں بھی دی جاتی ہیں کہ یہ بیمار نہ پڑیں۔ پھر بھی اگر کوئی جانور بیمار ہو جائے تو اسے جانوروں کے اسپتال لے جاتے ہیں اور اس کا علاج کیا جاتا ہے۔
حامد اور اس کی بہن چھٹی کا پورا لطف اٹھا کر ، خوشی خوشی گھر لوٹ آئے۔

سوچیے اور بتائیے

1.پانڈے کو گھنے بالوں سے کیا فائدہ ہوتا ہے؟

جواب:پانڈا ٹھنڈے ملک کا جانور ہے پانڈے کے گھنے بال اسے ٹھنڈے سے بچاتے ہیں۔ گرمی کے دنوں میں پانڈے کو گرمی بہت ستاتی ہے اس لیے چڑیا گھر میں پانڈے کے پنجڑے کو ٹھنڈا رکھا جاتا ہے۔

2.کنگارو اپنے پیٹ پر بنی تھیلی سے کیا کام لیتا ہے؟

جواب:کنگارو اپنے پیٹ پر بنی تھیلی میں اپنے بچے کو رکھتا ہے۔اس میں بچے کو بیٹھا کر یہ خوب تیز بھاگ سکتا ہے۔

3.کنگارو کی غذا کیا ہے؟

جواب:کنگارو  پھل، پتیاں اور سبزیاں بڑے شوق سے کھاتا ہیں اور اسے گیہوں بھی بہت پسند ہے۔

4.پیٹ بھرنے کے بعد شیر کیا کرتا ہے؟

جواب:پیٹ بھرنے کے بعد شیر کسی پیڑ کے نیچے سوجاتا ہے۔

5.چمپانزی کو گرمی کیوں ستاتی ہے ؟

جواب:چمپانزی ٹھنڈے ملک کا جانور ہے اس لیے ہندوستان میں اسے گرمی بہت ستاتی ہے۔

6.حامد اور اس کی بہن نے چڑیا گھر میں کون کون سے جانور دیکھے؟

جواب: حامد اور اس کی بہن نے چڑیا گھر میں شیر، ہاتھی، بھالو،ژراف،کنگارو، ہرن، چمپانزی، بندر اور کئی دوسرے جانور دیکھے۔

7.جانوروں کو بیماری سے بچانے کے لیے کیا کیا جاتا ہے؟

جواب:ان کہ پنجڑے اور کٹہروں کو روز صاف کیا جاتا  ہے اور سردی گرمی سے بچانے کا انتظام بھی کیا جاتا ہے۔کھانے میں مناسب غذائیں دی جاتی ہیں اور کبھی کبھی ایسی دوائیں بھی دی جاتی ہے کہ کوئی جانور بیمار نہ پڑے۔  پھر بھی اگر کوئی جانور بیمار پڑ جاتا ہے تواسے جانوروں کے اسپتال لے جایا جاتا ہے اور اس کا علاج کرایا جاتا ہے۔

نیچے لکھے ہوئے لفظوں کے متضاد الفاظ لکھیے

سردی : گرمی
پسند : نا پسند
سفید : سیاہ
خوش :اداس
بیمار : تندرست
مناسب : غیرمناسب


0 comments:

Post a comment

خوش خبری